Mohsin Bopali Ghazal


لب اگر یوں سئے نہیں ہوتے
اُس نے دعوے کئے نہیں ہوتے

خُوب ہے، خُوب تر ہے، خُوب ترین
اِس طرح تجزیئے نہیں ہوتے

گر ندامت سے تم کو بچنا تھا
فیصلے خُود کئے نہیں ہوتے

بات بین السّطوُر ہوتی ہے
شعر میں حاشئے نہیں ہوتے

تیرگی سے نہ کیجئے اندازہ
کچھ گھروں میں دیئے نہیں ہوتے

ظرف ہے شرطِ اوّلیں محسن
جام سب کے لیے نہیں ہوتے

Comments

Popular posts from this blog

Tum Kon Piya Dialogues & Drama Pics

Tum Kon Piya Episode Dialogues & Drama Pics